ڈبلیو ایچ او نے پاکستان میں لاک ڈؤن ختم کرنے کی مخالفت کردی

پاکستان میں ابھی تک کورنا وائرس کا ابھی تک مکمل خاتمہ نہیں ہو سکا اگر لاک ڈؤن کو مکمل ختم کیا جاتا ہے تو کورنا کے پھیلاؤ میں خطرناک حد تک اضافہ ہوسکتا ہے: اقوام متحدہ اور ذیلی اداروں کی اسلام آباد میں مشترکہ اجلاس

میڈیا رپورٹس کیمطابق اسلام آباد میں اقوام امتحدہ زیلی اداروں کا مشترکہ اجلاس ہوا جس میں پاکستان میں کورنا وائرس کی موجودہ صورتحال اور  پاکستانی حکومت کیجانب سے لاک ڈؤن کو ختم کرنے کے حوالے سے جائزہ لیا گیا

عالمی ادارہ صحت کیمطابق پاکستان میں ابھی تک کورنا وائرس کا ابھی تک مکمل خاتمہ نہیں ہو سکا اگر لاک ڈؤن کو مکمل ختم کیا جاتا ہے تو کورنا کے پھیلاؤ میں خطرناک حد تک اضافہ ہوسکتا ہے

دوسری جانب نیویارک میں عالمی ادارہ صحت نے دنیا بھر کے ممالک کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ لاک ڈؤن میں نرمی خطرناک ثابت ہو سکتی ہے جو ممالک لاک ڈؤن میں نرمی کررہے انہیں اس بات کا خیال رکھنا چاہیے کہ ان ممالک میں  کورنا وائرس کا مکمل خاتمہ ہوا ہوا ہے یا کورنا کورنا کے پھیلاؤ میں کمی آئی ہے یا نہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں