پنجاب نے لاک ڈؤن میں 31 میں تک توسیع پر غور شروع کردیا

عوامی دفاتر محدود وقت تک کھولنے ،سرکاری دفاتر پر بھی لاک ڈؤن لاگو نہیں ہوگا ،برآمدی سیکٹر پر بھی پابندی ختم کرنے پر غور شروع،زرائع

ایکسپریس ٹربیون کے مطابق حکومتی زرائع سے معلوم ہوا پنجاب حکومت نے 31 مئی تک لاک ڈون کے حوالے سے پلان تیار کر لیا اس میں حکومتی دفاتر اور برآمدی سیکٹر پر لاک ڈؤن کا طلاق نہیں ہو گا

ایک سنئیر عہدیدار کی جانب سے یہ انکشاف کیا گیا کہ حکومت پنجاب نے سفارشات کو حتمی شکل دے کر منظوری کے لیے آسلام آباد بھجوا دیا

ایک اور عہدیدارکی جانب سے اشارہ کیا گیا ہے کہ حکومت پنجاب نے رمضان میں دکانوں کو جزوی طور پر کھولنے کی اجازت دی جانی چاہیے

تاہم حکومت نے ان کے اوقات کارکے حوالے سے ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا  جبکہ تجویز وفاقی حکومت کو پیش کر دی گئی ہے وفاقی حکومت کی منظوری کے بعد نوٹیفکیشن جاری کیا جائے گا

اپنا تبصرہ بھیجیں