پارک لین ریفرنس آصف علی زرداری پر 10 اگست کو فرد جرم عائد کر دی جائے گی

اسلام آباد (نیوز ٹائم اپڈیٹس ) احتساب عدالت نے پارک لین ریفرنس میں سابق صدر آصف علی زرداری اور دیگر ملزمان پر فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی ایک مرتبہ پھر موخر کرتے ہوئے10اگست کی نئی تاریخ مقرر کردی ہے. پارک لین ریفرنس میں آصف علی زرداری کی ریفرنس خارج کرنے کی درخواست پر احتساب عدالت کے جج محمد اعظم خان نے سماعت کی عدالت میں آصف علی زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک پیش ہوئے ااور نیب کے ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل سردار مظفر عباسی پیش ہوئے

دوران سماعت نیب نے آصف زرداری کی بریت درخواست خارج کرکے فردجرم عائد کرنے کی استدعا کردی ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل نے عدالت سے کہا کہ تمام دلائل مکمل ہونے کے بعد آصف زرداری درخواست واپس نہیں لے سکتے انہوں نے کہا کہ ملزم جان بوجھ کر تاخیری حربے استعمال کررہا ہے، ایک ماہ فردجرم موخر کرواکے آج جواب الجواب پر درخواست واپس لے رہے ہیں. آصف زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے عدالت میں موقف اپنایا کہ ‘پارک لین ریفرنس نیب قانون نہیں بلکہ مالیاتی قوانین کا کیس ہے اس پر جج نے ریمارکس دیے کہ آصف علی زرداری کی بریت کی درخواست پر عدالت حکم جاری کرے گی عدالت نے سابق صدر آصف علی زرداری کی دونوں درخواستیں خارج کیں اور 10 اگست کو آصف زرداری پر فرد جرم عائد کرنے کی تاریخ مقرر کردی

اپنا تبصرہ بھیجیں