شاہ محمود قریشی نے اپنی ناکامی چھپانے کے لیے او آئی سی کی ساکھ کو داغدار کیا سعودی عرب

لاہور ( نیوز ٹائم اپڈیٹس ) پاکستان میں سعودی عرب کے سابق سفیر ڈاکٹر علی اودھ نے پاکستان سعودی عرب کے حالیہ تعلقات پر کالم لکھا

ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ کچھ دنوں سے پاکستانی میڈیا پر کچھ پریشان کن خبریں سامنے آئیں بین الاقوامی میڈیا ان خبروں کو اٹھا کر پاکستان سعودیہ تعلقات کو سبوتاژ کرنے کی کوشش کررہا ہے

ان تمام خبروں کا مقصد کشمیر کے متعلق او آئی سی پر سوال اٹھا کر امت مسلمہ میں پھوٹ پیدا کرنا ہے انہوں نے شاہ محمود قریشی کے حالیہ متنازعہ بیان کو بھی تشویشناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اگر او آئی سے مسئلہ کشمیر پر وزرائے خارجہ کونسل کا اجلاس نہیں بلاتی تو پھر وزیراعظم عمران خان اسلامی ممالک کا اجلاس بلانے پر مجبور ہو جائیں گے

سابق سفیر مزید لکھتے ہیں کہ افسوس کی بات یہ ہے کہ اس معاملے پہ سعودی تناطر تلاش کرنے کی زحمت گوارا نہ کی گئ لہذا ریکارڈ کو درست کرنے کے لیے وضاحت بہت ضروری ہے سعودی عرب اور پاکستان کے مابین مشترکہ مذہبی،ثقافتی اور معاشی اقدار پر مبنی دوستی کا ایک لازوال رشتہ قائم ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں