سویڈن دو کم سن بچوں کو تشدد اور زیادتی کے بعد زندہ دفن کر دیا گیا

سٹاک ہوم ( نیوز ٹائم اپڈیٹس) بچوں کو زبردستی ایک قبرستان میں لے جایا گیا جہاں ان پر مظالم کی انتہا کر دی گئی  پُرتشدد کارروائی کے بعد ملزمان نے بچوں کو زندہ در گور کر دیا

تفصیلات کیمطابق یورپی ملک سویڈن کے دارالحکومت کے قریبی علاقے سولنا میں ایک انتہائی دردناک واقعہ پیش آیا ہے جس میں 2 کمسن بچوں کو انسانیت سوز سلوک کا نشانہ بنانے کے بعد زندہ درگور کر دیا گی

 پولیس ذرائع نے بتایا ہے کہ متاثرہ بچوں کو منشیات خریدنے کی پیش کش کی گئی تھی جسے انہوں نے مسترد کر دیا  اس کے بعد ملزمان انہیں اغواء کر کے قریب واقعہ ایک قبرستان میں لے گئے پولیس کے مطابق سفاک ملزمان نے قبرستان کی حدود میں بچوں کو بد ترین تشدد کا نشانہ بنایا اور ان کے ساتھ جنسی زیادتی بھی کی

پولیس کیمطباق بچوں کی درست عمر کا پتا نہیں چل سکا البتہ یہ واضح ہے کہ وہ کم عمر تھے حملہ آوروں کا اس انسان دشمن سلوک کے پیچھے کیا مقصد تھا اس کا بھی فی الحال پتا نہیں چلایا جا سکا ہے یہ اندوہناک واقعہ ہفتے کی شب مقامی وقت کے مطابق 11 بجے پیش آیا اتوار کی صبح قبرستان کے قریبی راستے سے گزرتے ایک شخص نے بچوں کی آواز سنی تو انہیں قبر سے باہر نکالا جو کہ خوش قسمتی سے ابھی زندہ تھے

اپنا تبصرہ بھیجیں