توقع ہے سعودی عرب اور ایران بھی اسرائیل امن معاہدے میں شامل ہو جائیں گے ٹرمپ

واشنگٹن ( نیوز ٹائم اپڈیٹس ) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے امید ظاہر کی کہ متحدہ عرب امارات کے بعد سعودی عرب اور ایران بھی اسرائیل امن معاہدے میں شامل ہوں گے

تفصیلات کیمطابق گزشتہ روز وائٹ ہاؤس میں پریس کانفرنس کے دوران امریکی صدر نے کہا کہ متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کے درمیان ہونے والے معاہدے کا خیر مقدم کرتے ہیں اور اس امن معاہدے کے تحت یو اے ای کو ایف 35 لڑاکا طیاروں کی فروخت زیر غور ہے

صحافی کی جانب سے سوال پوچھا گیا کہ کیا متحدہ عرب امارات کے بعد سعودی عرب بھی اسرائیل کے ساتھ تعلقات بحال کردے گا جس پر امریکی صدر نے جواب دیا میرا خیال ہے سعودی عرب بھی اس معاہدے میں شامل ہوجائے گا

ایک اور غیر ملکی خبر رساں ادارے کا اپنی رپورٹ میں کہنا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا نہ صرف سعودی عرب بلکہ ایران کو بھی اسرائیل امن معاہدے کا حصہ بننا پڑے گا مجھے لگ رہا ہے دیگر عرب ممالک بھی اس امن معاہدہ کا حصہ ہوں گے اور آخر میں ایران کو بھی اس میں شامل ہونا ہوگا

اپنا تبصرہ بھیجیں