ترقی کا ضامن عثمان بزدار تحریر صابر بزدار

نرم دم گفتگو گرم دم جستجو سردار عثمان بزدار نے وزیراعلیٰ پنجاب کا عہدہ کا حلف اٹھایا تو ان کیخلاف ایک منظم میڈیا مہم شروع کی گئی لیکن شروع دن سے لیکر آج تک انہوں نے اپنے خلاف ہونیوالی میڈیا مہم ایک سائیڈ پر رکھتے جس طرح عوام کے سامنے اپنا لوہا منوایا وہ حیران کن ہے جنوبی پنجاب ہو یا پھر اپر پنجاب یا پھر شمالی پنجاب پنجاب کی تاریخ میں پہلی مرتبہ پورے پنجاب کی ترقی کے لیے یکساں اقدامات اٹھائے جارہے ہیں عمران خان کے منشور کے مطابق عثمان بزدار نے صحت اور تعلیم کے منصوبوں کو ترجیحی بنیادوں پر شروع کیا ہوا ہے اس وقت پورے پنجاب میں 9 بڑے ہسپتال بنانے کا کام جاری ہے جن میں نشتر ہسپتال 2 چلڈرن ہسپتال بہالپور ڈی جی خان انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی برن سنڑ بہالپور اور 5 مدر اینڈ چائلڈ ہسپتال شامل ہیں یہاں ایک بات قابل ذکر ہے کہ پچھلے 20 سالوں میں لاہور میں ایک بھی ہسپتال کا قیام عمل میں نہیں لایا گیا 20 سالوں کے بعد عثمان بزدار نے لاہور میں ایک اسٹیٹ آف دی آرٹ ہسپتال کے قیام کا اعلان کیا نئی ایجوکیشن پالیسی ای ٹرانسفر سسٹم کے تحت 40 ہزار استاذہ کا میرٹ پر بغیر رشوت گھر بیٹھے ٹرانسفر کیے گئے پنجاب بھر میں 7 نئی یونیورسٹیز کا قیام عمل میں لایا جارہا ہے جن میں یونیورسٹی آف میانوالی راولپنڈی وویمن یونیورسٹی یونیورسٹی آف چکوال کوہسار یونیورسٹی مری بابا گرو نانک یونیورسٹی ننکانہ صاحب یونیورسٹی آف لیہ اور تھل یونیورسٹی آف بھکر شامل ہیں 3 نئی ٹیکنیکل یونیورسٹیز کا قیام بھی عمل لایا جا چکا ہے جن میں تائنجن ٹیکنکل یونیورسٹی آف لاہور میر چاکر خان رند یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی ڈی جی خان اور پنجاب یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی رسول شامل ہیں 50 کالجز میں بی ایس کلاسز کا آغاز کیا گیا 1200 سکولوں کو اپگریڈ کیا گیا اور وزیراعلی پنجاب نے اپنے ایک حالیہ بیان میں دعویٰ کیا کہ 5 سال کے دوران انشااللہ پنجاب کے ہر ضلع میں یونیورسٹی کا قیام عمل میں لائیں گے پنجاب کو انڈسٹریل حب بنانے اور بیروزگاری کے خاتمے کے ویژن کے تحت پنجاب بھر میں 10 اسپیشل اکنامک زونز کے قیام کی منظوری دی گئی جن میں رحیم یار خان انڈسٹریل اسٹیٹ بھلوال انڈسٹریل اسٹیٹ وہاڑی انڈسٹریل اسٹیٹ قائداعظم بزنس پارک سمال انڈسٹریل اسٹیٹ گوجرانولہ سمال انڈسٹریل اسٹیٹ وزیر آباد M-3 انڈسٹریل سٹی فیصل آباد ویلیو انڈسٹریل سٹی فیصل آباد اور علامہ اقبال انڈسٹریل سٹی فیصل آباد شامل قائد اعظم بزنس پارک اور علامہ اقبال انڈسٹریل سٹی فیصل آباد کے لیے غیر ملکی سرمایہ کاروں سے اربوں ڈالر کے معاہدے کیے گئے کسانوں کو ملکی معیشت کی ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت سمجھتے ہوئے پنجاب میں پہلی مرتبہ کسانوں کو گندم اور گنے کا پورا ریٹ ملا کسانوں کے 26 ارب کے بقایاجات شوگر ملز سے ریکور کرائے گئے اور کسانوں کو مںڈیوں اور ماڈل بازاروں میں کسان پلیٹ فارم مہیا کیا گیا پنجاب کی تاریخ میں پہلی بار اینٹی کرپشن نے 132 ارب روپے کی تاریخی ریکوریاں کرکے ملکی خزانہ جو فائدہ دیا گیا قبضہ مافیہ سے 10 لاکھ کنال اراضی واپس لی گئی کاروبار کی آسانی کے لیے ای گورننس کے منصوبے عمل میں لائے گئے پنجاب کی تاریخ کا سب بہترین بلدیاتی نظام منظور کرا لیا گیا لیگل ریفارمز کے لیے پنجاب اسمبلی سے 30 سے زائد بل پاس کیے گئے اور 30 سے زائد قوانین منظوی کے مراحل میں ہیں پولیس ریفارمز کے تحت 36 اضلاع میں پولیس کے متعلقہ 80 فیصد کاموں کے لیے خدمت مراکز کا قیام عمل میں لایا جائے گا 8787 پر ائی جی شکایت سیل کا قیام 10 ہزار پروفیشنلز کی بھرتی اور اسمارٹ پولیس اسٹیشن کا قیام عمل میں لایا جارہا ہے کھیلوں کی سرگرمیوں کے لیے پنجاب کے 61 تحصیلوں میں سے 24 ایسی تحصیلوں میں سپورٹس کمپلیکس کا قیام عمل میں لایا جارہا ہے جہاں کھیلوں کی سہولیات نا ہونے کے برابر ہیں سیاحت کے فروغ کے لیے پنجاب میں 10 نئے سیاحتی مقامات کی ڈویلپمنٹ جاری ہے کلین اینڈ گرین پنجاب کے تحت پنجاب بھر 50 کروڑ پودے لگانے کا ٹارگٹ اور نئے نیشنل پارکس کی منظوری دی گئی اربن فارسٹ متعارف کرائے گئے لاہور سمت پنجاب کے تمام بڑے شہروں کے اگلے 30 سالہ ماسٹر پلان پر کام جاری منزلیں آسان پروگرام کے تحت پنجاب کے دیہاتوں کے لیے 1500 کلو میٹر سڑکوں کی تعمیر جاری ہے یہ تمام ایسے منصوبے ہیں جن کے دور رس اثرات سامنے آئیں گے پنجاب میں پہلی مرتبہ اس طرح عوامی منصوبوں کا شروع کیا گیا اس قبل لاہور سمیت پنجاب کے چند بڑے شہروں کو ترقی دے کر پورے پنجاب کی ترقی کی مثالیں دی جاتی تھی

اپنا تبصرہ بھیجیں