استقبال ماہ رمضان

حضرت مفتی احمد یار خان نعیمی تفسیر نعیمی میں فرماتے ہیں کہ روزہ صبر ہے جس کی جزاء رب عزوجل ہے وہ اس مہینے میں رکھا جاتا ہے اس لیے اسے ماہ صبر کہتے ہیں مواسات کے معنی بھلائی کرنا اس لیے اس مہینے سارے مسلمانوں سے خاص کر اہل قرابت سے بھلائی کرنا ثواب ہے اس لیے اسے ماہ مواسات کہتے ہیں اس میں رزق کی فراخی بھی ہوتی ہے کہ غریب بھی نعمتیں بھی کہتے ہیں اس لیے اس کا نام ماہ وسعت رزق بھی ہے

رمضان المبارک کی یہ بڑی انواریت اور خصوصیت بھی ہے کہ مہینوں میں اس کا نام فضیلت کہ ساتھ قرآن میں آیا ہے رمضان شریف میں سحری اور افطاری کے وقت دعا قبول ہوتی ہے یہ مرتبہ کسی اور مہینے کو حاصل نہیں رمضان المبارک کے استقبال کے لیے سارا سال جنت کو سجایا جاتا ہے رمضان المبارک میں اللہ عزوجل کی خوب خوب عبادت کرنی چاہیے اور ہر وہ کام کرنا چاہیے جس میں اللہ عزوجل اور اس کے محبوب حضرت محمدﷺ کی رضا ہو

اپنا تبصرہ بھیجیں